کالم

پودے سوکھ جاتے ہیں۔۔۔تحریر:مسزجمشیدخاکوانی

          ٓآج کئی دنوں بعد اپنے لان میں نکلی تو کونے میں ایک سوکھے پودے پر نظر پڑی میں نے مالی سے پوچھا بابا یہ پودا کیسے سوکھ گیا؟ کہنے لگا بس بی بی اصل میں جب تک میں پائپ لے کر اس پودے تک پہنچتا ہوں لائٹ چلی جاتی ہے یوں یہ مسلسل پانی نہ ملنے سے سوکھ گیا ... Read More »

نقطعہ نظر۔۔۔تحریر : شفاعت ملک

ٹریفک کے مسائل آبادی میں اضافے کے ساتھ ساتھ بڑھ جاتے ہیں۔ اور یہ معاملہ پوری دنیا میں ایک جیسا ہی ہے مگر ان مسائل کا حل بدلتے وقت کے ساتھ بہتر منصوبہ بندی کر کے نکالا بھی جاتا ہے۔ہمارے شہر میں بھی یہ مسئلہ سنگین صورتحال اختیار کرتا جا رہا ہے ۔بدقسمتی سے ہمارے ہاں کبھی بھی اس مسئلے ... Read More »

انقلاب کی آمد آمد۔۔۔تحریر :پروفیسررفعت مظہر

    میاں نوازشریف کی نااِہلی پر ہم بہت خوش تھے کیونکہ پھلتا پھولتا اور آگے بڑھتا پاکستان ہمیں ہرگز قبول نہیں۔ اگر پاکستان میں راوی چین ہی چین لکھنے لگے تو پھر ہم اپنے کالموں کا پیٹ بھرنے کے لیے تڑپتا ،پھڑکتا اور مچلتا مواد کہاں سے لائیںگے اور ہم جیسے لکھاریوں کو گھاس کون ڈالے گا؟۔ ایسی صورت میںتو ... Read More »

اہل سیاست کی فنکاریاں ۔۔۔تحریر :مسزجمشیدخاکوانی

                   ترکمانستان کا بادشاہ لمبی عمر کا خواہاں تھا وہ مرنا نہیں چاہتا تھا اس کے طبیبوں نے بتایا ہندوستان کی سرزمین پر کچھ ایسی جڑی بوٹیاں ملتی ہیں جو آب حیات کی تاثیر رکھتی ہیں اگر آپ وہ جڑی بوٹیاں منگوا لیں تو ہم ایسی دوائی تیار کر لیں گے جس سے آپ جب تک چاہے زندہ رہ سکیں ... Read More »

نظریہ ضرورت کی گونج۔۔۔تحریر :پروفیسرمظہر

    لگ بھگ چار عشرے آمریتوں کے عفریت کے پنجہ¿ استبداد میں سِسکنے والے وطنِ عزیز کو اگر مارشل لاو¿ں کی سیاہ آندھیوں کے حوالے کرنے کا جرم سیاستدانوں سے سرزد ہوا تو اِس جرمِ عظیم میں عدلیہ کا کردار بھی واضح ہے ۔یہ طے کہ عدل ،جمہور کی طاقت ہوتا ہے اور عادل کی حدود وقیود آئین طے کرتا ... Read More »

غلام قوم کو ایک اور جشنِ آزادی مبارک۔۔۔تحریر :ذیڈ اے زبیری

غلام قوم کو ایک اور جشنِ آزادی مبارک۔۔ چلے چلو کہ وہ منزل ابھی نہیں آئی     قارئین !کافی عرصہ قلم قرطاس سے تعلق منقطع رہا ۔ نمایاں ہاتھ تو میری روایتی سستی کا ہی ہے لیکن دیگر عوامل بھی مانع رہے پتہ نہیں یہ سلسلہ کب تک جاری رہتا کہ برادر عزیز عارف ادلکہ کے محبت بھرے اصرار نے ... Read More »

انصاف ہوتاہوا نظر آنا چاہیے۔۔۔تحریر :پروفیسررفعت مظہر

    نئی وفاقی کابینہ نے حلف اُٹھا لیا ۔ چند نئے چہروں کے سوا سبھی وزراءاور وزرائے مملکت وہی جو میاں نوازشریف کی کابینہ میں تھے ۔اِس کابینہ کا انتخاب خود میاں صاحب نے کیااور بقول نَومنتخب وزیرِاعظم شاہد خاقان عباسی امور ِمملکت کے سبھی فیصلے بھی وہی کیاکریں گے ،تو پھر فرق کیا پڑا؟۔ وہی نوازلیگ اور وہی مرکز ... Read More »

یہ اپنی ہی دھرتی کو کس طرح لوٹ رہے ہیں۔۔۔تحریر :مسزجمشیدخاکوانی

                   2013میں نواز حکومت بننے کے کچھ عرصے بعد حکومت نے ایل این جی امپورٹ کا پروجیکٹ لانچ کیا جس میں تکنیکی اعتبار سے سوئی سدرن،سوئی نادرن،پی ایس او،اور انٹر سٹیٹ گیس سسٹمز نامی کمپنیوں کی شرکت ضروری تھی ۔ایل این جی امپورٹ کرنے سے پہلے فیصلہ کیا گیا کہ کراچی پورٹ پر ایل این جی سٹور کرنے کا ٹرمینل ... Read More »

ڈرو ! اُس وقت سے۔۔۔تحریر :پروفیسررفعت مظہر

    یوں تو کپتان مقبول رہنماءہیں اور ایک عالم ،خصوصاََ نوجوان طبقہ اُن کا گرویدہ بھی لیکن ہمیں اُن میں سیاستدانوں والی کوئی بات دور دور تک نظر نہیں آتی ۔گزری اتوار اُنہوں نے اسلام آباد میں یومِ تشکر منایا ۔یہ یومِ تشکر میاں نوازشریف کی نا اہلی پر ترتیب دیا گیا ۔ ہم نے ایسا ”تشکر“ زندگی میں پہلی ... Read More »

دِلوں کا وزیرِاعظم۔۔۔تحریر:پروفیسرمظہر

    عدل تو جمہور کا محافظ ہوا کرتا ہے لیکن یہ کیسا عدل ہے جو جمہور کا قاتل نکلا۔ میاں نوازشریف جمہور کے نمائندے تھے جن کی سیاست کو عدل کی دودھاری تلوار سے قتل کرنے کی سعی کی گئی لیکن وہ ایوانِ وزیرِاعظم سے نکل کر دلوں کے حکمران بن گئے ۔ اُن کے نام کے ساتھ سابق کا ... Read More »