چکوال واپڈا افسران نے سٹیزن پورٹل ایپ پر درج شکایت ردی کی ٹوکری میں ڈال دی ،پانچ ماہ بیت گئے تا حال بجلی کنکشن نہیںہو سکا۔

چکوال واپڈا افسران نے سٹیزن پورٹل ایپ پر درج شکایت ردی کی ٹوکری میں ڈال دی ،پانچ ماہ بیت گئے تا حال بجلی کنکشن نہیںہو سکا۔

تلہ گنگ (ارشد کو ٹگلہ سے) چکوال واپڈا افسران نے سٹیزن پورٹل پاکستان ایپ پر درج شکایت ردی کی ٹوکری میں ڈال دی ،پانچ ماہ بیت گئے تا حال مکینوں کو بجلی کنکشن نہیں دیا جا سکا،سائل پریشان ۔یو نین کونسل ملتان خورد کے نواحی گاﺅں کو ٹشیرا کے رہائشی نے سٹیزن پورٹل ایپ پر دس جنوری 2019کو شکایت درج کروائی تھی کہ بجلی کے پول لگ چکے ہیں ان میں تاحال تاریں نہیں ڈالی گئیں ، شکایت پر پانچ ماہ قبل تاریں تو ڈالو دی گئی ہیں لیکن پانچ ماہ بیت چکے تاحال کنکشن نہیں دیا جا سکا اور علاقہ مکین پہلے کی طرح زندگی بسر کرنے پر مجبور ہیں ۔کوٹشیرا کے مکینوں نے سٹیزن پورٹل ایپ پر درج شکایت پر عمل در آ مد نہ ہونے پر احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم کی جانب سے بنائی گئی ایپ بھی ہمارے کام نہ آ سکی اور چکوال واپڈا افسران کی دھکا شاہی جاری ہے اور سٹیزن پورٹل ایپ پر درج ہماری شکایت واپڈا افسران نے ردی کی ٹوکری کی نظر کر دی ہے ،چکوال کے واپڈا افسران سٹیزن پورٹل ایپ پر درج شکایت کی دھجیاں اڑا رہے ہےں اور سائلین اپنے مسائل کے حل کیلئے در بدر کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہیں ۔واضح رہے کہ کو ٹشیرا کے مکینوں کیلئے سابق رکن صوبائی اسمبلی شہریار اعوان کی جانب سے بجلی کی گرانٹ جاری کروائی گئی تھی ۔