سردار ذوالفقار علیخان دلہہ کی سیاسی پوزیشن دن بدن مستحکم ،بلدیاتی الیکشن میں اہم رول اداکریں گے ۔

سردار ذوالفقار علیخان دلہہ کی سیاسی پوزیشن دن بدن مستحکم ،بلدیاتی الیکشن میں اہم رول اداکریں گے ۔

چکوال( شفیق ملک سے)موجودہ حکومت کے سو روزہ ایکشن پلان کی مدت قریب آرہی ہے اور ضلع چکوال کا سیاسی منظر نامہ بھی واضح ہونا شروع ہوگیا ہے۔ ضلع کی سیاست اس وقت چکوال میں رکن قومی اسمبلی سردار ذوالفقار علی خان دلہہ، صوبائی وزیر ہائرایجوکیشن راجہ یاسر سرفراز جبکہ تلہ گنگ میںصوبائی وزیر معدنیات حافظ عمار یاسر کے گرد گھوم رہی ہے۔ سردار غلام عباس ضلع چکوال کی سب سے موثر سیاسی قوت ہونے اور پچیس جولائی کی موجودہ تبدیلی کے روح رواں ہونے کے باوجود پس پردہ چلے گئے ہیں اور یہ ضلع چکوال کی سیاسی تاریخ کا عجیب و غریب منظر نامہ ہے۔ سردار غلام عباس پر آیا ہوا کڑا وقت بدستور اپنے پنجے گاڑے ہوئے ہیں ، محکمہ انٹی کرپشن میں سیمنٹ فیکٹریوں والا مقدمہ بھی ان کے پیچھے ہے۔ جبکہ اب ایم پی اے سردار آفتاب اکبر کیخلاف بھی ہائی کورٹ میں دائر رٹ پٹیشن پر سماعت شروع ہوچکی ہے۔ سرداران کوٹ چوہدریاں پر یہ ایک کڑا وقت ہے اور ضلع چکوال کے15لاکھ عوام کی نظریں اور خصوصی طور پر سردار غلام عباس کے لاکھوں ووٹرز اور حمایتی اس ساری صورتحال کا قریبی جائزہ لے رہے ہیں جبکہ دوسری طرف سردار ذوالفقار علی خان دلہہ اپنی سیاسی پوزیشن مستحکم کرنے کیلئے زبردست جوڑ توڑ کررہے ہیںجبکہ تحصیل تلہ گنگ کی سیاست میں حافظ عمار یاسر ہی معتبر دکھائی دیتے ہیں۔ مسلم لیگ ن کے ملک سلیم اقبال اور شہریار اعوان ابھی تک ہر سیاسی میدان میں دفاعی پوزیشن پرجاتے دکھائی دے ہیں ، چیئرمین ضلع کونسل طارق افضل ڈھلی نے بھی حالیہ ضلع کونسل کی خاتون نشست پر پی ٹی آئی کی امیدوار کو ووٹ دیکر مسلم لیگ ن کے اندر ہلچل مچا دی ہے۔