تلہ گنگ منتخب نمائندوں کی تو جہ کا منتظر ۔۔۔تحریر :شفاعت ملک

تلہ گنگ منتخب نمائندوں کی تو جہ کا منتظر ۔۔۔تحریر :شفاعت ملک

وزیراعظم صاحب کی صاف اور سر سبز پاکستان مہم کا سن کر آج سے18 سال پہلے سپرنگ فیلڈ کمپیوٹرز کی Think clean live cleanکی مہم یاد آگئی ۔ جس میں شہر کے دانشوروں کے ساتھ ملکر اس ادارے نے ایک آگاہی مہم چلائی تھی۔جس میںبعد ازاں اس وقت کے بلدیہ کے ایڈمنسٹریٹر صاحب نے بھی بھرپور شمولیت کی تھی۔ مقامی غیر سرکاری تنظیموں نے بھی اپنا پھرپور کردار ادا کیا تھا۔ جس میں مباحثے،واک ،اشتہارات ا ور سٹکرز وغیرہ کی تقسیم کئی مراحل میں کی گئی سکولوں اور کالجوں میں لیکچرز بھی کرائے گئے۔ جسکے اچھے اثرات مرتب ہوئے تھے۔ وزیراعظم صاحب کی طرف سے شجرکاری اور صفائی کے حوالے سے یہ تحریک قابل ستائش ہے۔ ایسے کام عموما حکومتوں کی طرف سے کم دیکھے گئے ہیں۔ ان کاموں میں ہمیں بھی اپنا بھرپور کردار ادا کرنا چاہیے تاکہ ہم اپنے ملک اور اپنے شہر کو رہنے کے لئے اچھی جگہ بناسکیں۔ اس کے بعدسپرنگ فیلڈ کی طر ف سے Donate blood save lifeکی بھی مہم چلائی گئی تھی۔ جس کے ذریع خون کا عطیہ دینے کی اہمیت اور فوائد کے بارے میں آگاہی دی گئی تھی۔
اس وقت شہر کی حالت ہمیشہ کی طرح ہماری اپنی توجہ کی منتظر ہے۔ مسئلہ چاہے تجاوزات کا ہو ،صفائی کا ہو، ٹریفک کاہو یا منہ مانگے داموں اشیاءفروخت کر نے کا۔ ہمیں اپنا کردار ادا کرنا پڑے گا تب ہی ان مسائل کاکوئی حل نکل پائے گا۔ حکومت چاہے بھی تو ان مسائل سے چھٹکارا پانا مشکل ہو گا۔ جب تک ہماری شراکت ان کی کوششوں میں شامل نہیں ہو گی۔ شہرمیں سبزی فروٹ کے نرخ اکثر دکانوں پر الگ الگ ہوتے ہیں ۔ ایک تجویز جوکہ پہلے بھی دے چکاہوںکہ سبزی فروٹ خریدتے وقت دکاندار سے شائستگی کے ساتھ ریٹ لسٹ دیکھنے کی گزارش ضرور کیا کیجئے۔ آپ کی صرف یہ ایک عادت دکاندار کو من مانے نرخ لینے سے روکنے میں بہت معاون ثابت ہو سکتی ہے۔ مقامی انتظامیہ کو بھی اپنی ذمہ داریوں سے نظر یں چرانے کی عادت بدلنا ہو گی۔اگر ریٹ لسٹس مہیا کیجاتی ہیں تو ان لسٹس پر عمل کروانا بھی اس ہی ادارے کی ذمہ داری ہے۔ اﷲ تعالی ہم سب کے لئے آسانیاں پیدا کریں اور ہم سب کے حامی وناصر ہوں۔آمین