پانچ مئی کو تلہ گنگ ضلع کے وعدے کی پانچویں سالگرہ ،گرینڈ جرگہ کا مذمتی واحتجاجی اجلاس ۔

پانچ مئی کو تلہ گنگ ضلع کے وعدے کی پانچویں سالگرہ ،گرینڈ جرگہ کا مذمتی واحتجاجی اجلاس ۔

تلہ گنگ (نما ئندہ بول تلہ گنگ)5مئی کو ضلع تلہ گنگ کے حوالے سے گرینڈ جرگہ تلہ گنگ کا مذمتی و احتجاجی اجلاس ، ضلع تلہ گنگ کے حوالے سے نواز شریف کا وعدہ وفا نہ ہونا ہمارے منتخب نمائندوں کی ناہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے مقررین کا اجلاس سے خطاب ، ضلع تلہ گنگ کے حوالے سے جدوجہد مزید تیز کرنے کا عزم ، تفصیلات کے مطابق 5مئی 2013کو تلہ گنگ میں دوران خطاب سابق وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف نے تلہ گنگ کی عوام سے ضلع تلہ گنگ کا وعدہ کیا تھا وار اسی بنیاد پر تلہ گنگ کی عوام نے ن لیگ کو ووٹ دے کر کامیاب بھی کیا تھا مگر اب 5سال کا طویل عرصہ گزر جانے کے باوجود بھی میاں محمد نوازشریف کا وعدہ آج تک وفا نہ ہوسکا ، اس حوالے سے 5مئی 2018 کو گرینڈ جرگہ تلہ گنگ کے زیر اہتمام مذمتی و احتجاجی اجلاس منعقد کیا گیا جس میں تحصیل بھر سے صحافتی و سماجی اور کاروباری شخصیت سمیت لوگوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے برگیڈ(ر) امجد ملک ، ڈاکٹر آفتاب حیات ملک ، صدیق علوی ایڈووکیٹ ، محمد اعجاز بھٹی ایڈووکیٹ ، اکرم ضیاء، ڈاکٹر علی حسنین نقوی ، پیر اکبر ساقی ، قاضی عامر اور محمد نذیر سمیت دیگر کا کہنا تھا کہ نواز شریف اور ن لیگ نے اقتدار حاصل کرنے کے لیے تلہ گنگ کی عوام سے ضلع تلہ گنگ کا وعدہ کر کے ووٹ تو حاصل کر لیے مگر افسوس کہ 5سال اقتدار کے مزے لوٹنے کے باوجود ضلع تلہ گنگ کا وعدہ ابھی تک پورا نہیں کیا گیا جو کہ تلہ گنگ کی عوام کے ووٹ سے منتخب ہونے والے نمائندوں کی نااہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے اگر منتخب نمائندے ضلع تلہ گنگ کی آواز ایوان بالا میں بلند کرتے تو اب تک تلہ گنگ ضلع بن چکا ہوتا مگر افسوس ایسا نہیں کیا گیا ، اس لیے اب تلہ گنگ کی عوام کو اپنا حق خود لینا ہو گا جو کہ آنئدہ الیکشن میں تلہ گنگ کی عوام کے جذبات سے کھیلنے والوں کو سبق سیکھا کر ہی لیا جا سکتا ہے کیوں کہ بقول ن لیگ کہ اگر وہ اس حلقے سے کھمبا بھی الیکشن میں کھڑا کر دیں تو تلہ گنگ کی عوام اس کو بھی ووٹ دے کر کامیاب کرا دے گی مگر اب آئندہ الیکشن میں تلہ گنگ کی عوام کو خود کو باشعور ثابت کرتے ہوئے جھوٹے وعدوں کی بنیاد پر ووٹ بٹورنے والوں کو ان کی اوقات یاد دلانی ہو گی ، اس موقع پر تلہ گنگ تا میانوالی روڈ کو ون وے کیے جانے کے حوالے اور ضلع تلہ گنگ کے حوالے سے کوششیں مزید تیز کیے جانے کا بھی عزم کیا گیا اور نواز شریف کے جھوٹے وعدے کو 5سال کا عرصہ گزر جانے پر فاتحہ بھی پڑھی گئی ۔